Namaz Benefits In Islam

0
190
Namaz Benefits In Islam
https://www.google.com/

نماز (نماز) اسلام کے 5 اہم ترین ستونوں میں سے ایک ہے، جسے دن میں پانچ مرتبہ ادا کرنے کی ضرورت ہے۔

صلاۃ ایک عربی لفظ ہے جس کا مطلب ہے “عبادت”، عبادت کا ایک بڑا عمل جو ہر مسلمان پر فرض ہے۔

نماز یا نماز اللہ سبحانہ و تعالیٰ کے احکامات کی اطاعت کی عملی علامت ہے، جو اللہ سبحانہ و تعالیٰ اور دین اسلام پر ہمارے ایمان کا ثبوت ہے۔

نماز اللہ تعالیٰ کے ساتھ براہ راست رابطے کا ذریعہ ہے۔ مزید یہ کہ یہ انسان کو برے کاموں اور بری عادتوں سے بھی باز رکھتا ہے۔

فجر، ظہر، عصر، مغرب اور عشاء کی پانچ نمازیں ہیں جنہیں روزانہ اپنے مقررہ اوقات میں ادا کرنا ضروری ہے۔

اسلام کی طرف سے مقرر کردہ رسمی نمازوں کو دن میں پانچ وقت کا مشاہدہ کرنا ہے.

نماز فجر: طلوع فجر، طلوع آفتاب سے پہلے

نماز ظہر: دوپہر، سورج کے بلندی سے گزرنے کے بعد

صلاۃ العصر: ظہر کا آخری حصہ

نماز مغرب: غروب آفتاب کے فوراً بعد

نماز عشاء: غروب آفتاب اور آدھی رات کے درمیان

نماز کی اہمیت سے متعلق پیغمبر اسلام محمد صلی اللہ علیہ وسلم کے چند اقوال کا ذکر کیا گیا ہے۔

عبداللہ بن قرط رضی اللہ عنہ سے مروی ہے:

رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: ”قیامت کے دن سب سے پہلے بندے سے اس کی نماز کے بارے میں سوال کیا جائے گا۔

اگر اس کی نماز اچھی ہوگی تو اس کے دوسرے اعمال بھی اچھے ہوں گے۔ اگر اس کی نماز خراب ہے تو اس کے دوسرے اعمال بھی برے ہوں گے۔ (طبرانی، ترغیب)

جابر بن عبداللہ رضی اللہ عنہ سے روایت ہے کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: ایمان اور کفر کے درمیان فرق نماز کا ترک کرنا ہے۔ (مسلم، ابوداؤد، ترمذی، ابن ماجہ، مسند)

دن اور رات میں 5 مرتبہ نماز پڑھنے سے ہمارے گناہوں کو اسی طرح صاف ہو جاتا ہے جس طرح دن اور رات میں متعدد بار دھونے سے ہمارے جسم کو تمام بوسیدہ اور مٹی صاف ہو جاتی ہے۔

اللہ تعالیٰ نے قرآن پاک میں نماز کے بارے میں ان الفاظ میں فرمایا:

“اے ایمان والو! صبر اور نماز سے مدد مانگو۔ واقعی! اللہ صابرین (صبر کرنے والوں وغیرہ) کے ساتھ ہے۔‘‘ (قرآن، 2:153)

اللہ تعالیٰ نے فرمایا: ’’اور صبر اور نماز سے مدد لو‘‘۔

اور واقعی یہ انتہائی بھاری اور سخت ہے سوائے الخاشیون کے۔ اللہ پر سچے ایمان والے – جو اللہ کی پوری اطاعت کرتے ہیں، اس کے عذاب سے بہت ڈرتے ہیں،

اور اس کے وعدے (جنت وغیرہ) اور اس کی تنبیہات (جہنم وغیرہ) پر ایمان لاؤ” (قرآن، 2:45)

Benefits of Salah (Prayers)

جو دعائیں ہم ادا کرتے ہیں ان کے ہمارے جسم، روح اور سماجی زندگی کے لیے بہت سے فائدے ہیں۔ دعا سے ہمیں جو فوائد حاصل ہوتے ہیں وہ درج ذیل ہیں:

نماز برے کاموں اور بری عادتوں کے خلاف ڈھال ہے۔

اللہ تعالیٰ قرآن مجید میں ارشاد فرماتا ہے: ’’بے شک نماز بے حیائی اور ناجائز کاموں سے روکتی ہے‘‘ (قرآن، 29:45)

دعا اللہ تعالیٰ سے دعا مانگنے کا پسندیدہ ذریعہ ہے۔

جب کوئی شخص اللہ کی عبادت کرتا ہے تو اس کا اس کے ساتھ تعلق پیدا ہوتا ہے اور اس کے اندر یا اس تعلق کے بعد کی کوئی دعا اللہ تعالیٰ کی طرف سے کسی دوسری حالت میں کی جانے والی دعا کے مقابلے میں زیادہ قبول ہوتی ہے۔

اسلامی مساوات نماز سے ظاہر ہوتی ہے۔ جب مسلمان جماعت میں نماز پڑھتے ہیں، امیر و غریب، اعلیٰ اور ادنیٰ، سب کندھے سے کندھا ملا کر کھڑے ہوتے ہیں۔

یہ دین اسلام میں انسانیت کی مساوات کا بہترین منظر ہے۔

دعا ہمارے خالق کے ساتھ رابطے میں رہنے کی ہماری روحانی ضروریات کو پورا کرتی ہے۔ اس سے روح کو سکون اور خوشی ملتی ہے۔

جو لوگ روزانہ پانچ نمازیں پڑھتے ہیں وہ عاجزی اختیار کرتے ہیں جو اللہ تعالیٰ کو پسند ہے اور اس کی کامیابی سے وابستہ ہے۔

قرآن پاک میں اللہ سبحانہ وتعالیٰ کا ارشاد ہے: ’’بے شک وہ مومن کامیاب ہوئے جو اپنی نماز میں عاجزی کرتے ہیں۔‘‘ (قرآن، 23:1-2)

مسلمان متقی بنتے ہیں اور راہ راست پر چلتے ہیں۔ اس سلسلے میں نماز کا بہت بڑا کردار ہے کیونکہ یہ مومنین میں تقویٰ یا تقویٰ کو فروغ دیتی ہے۔

نماز جسمانی اور روحانی صحت کی حفاظت کرتی ہے۔
جو لوگ پانچ وقت کی نمازیں پڑھتے ہیں ان کا دل اللہ تعالی کے ایمان سے مضبوط ہوتا ہے۔

نماز پڑھنا اللہ تعالیٰ سے تعلق پیدا کرنے کا ذریعہ ہے اور جب ایک مسلمان دن میں پانچ مرتبہ ایسا کرتا ہے تو اس کے نتیجے میں تعلق فطری طور پر مضبوط ہوتا ہے۔

نماز مسلمانوں کو جہنم کی آگ سے بچاتی ہے۔ روزانہ کی پانچ نمازیں مسلمانوں کے لیے سکون کا باعث ہیں۔

نماز پڑھنے سے مسلمان کی خطائیں معاف ہو جاتی ہیں، اس کی نیکیاں نقل ہو جاتی ہیں اور پھر زمین و آسمان کے رب کا قرب حاصل ہو جاتا ہے۔

روزانہ نماز پڑھنے والے آسانی سے سستی سے نجات پا سکتے ہیں۔
صلوٰۃ اللہ (SWT) کی رحمتیں اور برکتیں لاتی ہے۔
نماز روح کی پرورش ہے۔

نماز ہمیں نقصان دہ چیزوں سے دور رکھتی ہے۔
صلاۃ دل کو تقویت دیتی ہے۔

نماز سے جسمانی قوت میں اضافہ ہوتا ہے۔
دعا اللہ سبحانہ وتعالیٰ کی طرف سے برکت لاتی ہے۔
نماز شیطان کو دور کرتی ہے۔

رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا: جنت کی کنجی نماز ہے۔ نماز کی کنجی وضو ہے۔” (مسند احمد)

ایک مسلمان کو یہ جان لینا چاہیے کہ سب سے بڑھ کر نماز ایک فرض ہے اور ہر مسلمان کو اس فرض کو پورا کرنا ہے اور اللہ تعالیٰ کی رحمتیں حاصل کرنی ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here