Friday, May 20, 2022
Home Deeni Baten Gaus pak ki Niyaz

Gaus pak ki Niyaz

غوث پاک کی نیاز کا حکم
سوال(36- 82):کافی دنوں سے ہمارے محلہ میں یہ موضوع چھڑا ہوا ہے کہ غوث پاک (عبد القادر جیلانی رحمہ اللہ) کی نیاز جائز ہے یا نہیں؟ اور وہ کھانا حلال ہے یا نہیں؟ امید کہ آپ قرآن وحدیث کی روشنی میں مفصل جواب دیکر عند اللہ ماجور ہوں گے۔
جواب: نذر کی دو قسمیں ہیں: نذر طاعت اور نذر معصیت، پہلی قسم کی نذر کا پورا کرنا صحیح اور درست ہے، بلکہ ایسی نذر کا پورا کرنا مومنوں کی علامت بتائی گئی ہے، چنانچہ اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے:
﴿ يُوْفُوْنَ بِالنَّذْرِ وَيَخَافُوْنَ يَوْمًا كَانَ شَرُّهٗ مُسْـتَطِيْرًا﴾(1)
وہ نذر کو پوری کرتے ہیں اور ایسے دن سے ڈرتے ہیں جس کا شر عام ہے۔
اسی طرح رسول اللہﷺ نے فرمایا ہے: “مَنْ نَذَرَ أَنْ يُطِيعَ اللَّهَ فَلْيُطِعْهُ” (رواه البخاري(2)وابوداود(3)والترمذي(4)
جس نے اللہ کی اطاعت وفرما برداری کے لئے نذر مانی ہو وہ اس کو پورا کرے۔
اس سے معلوم ہوا کہ نذر طاعت کا پورا کرنا واجب ہے۔
رہی نذر کی دوسری قسم (یعنی نذر معصیت) تو اس کا پورا کرنا جائز نہیں ہے، کیونکہ رسول اللہ ﷺ نے فرمایا:
”وَمَنْ نَذَرَ أَنْ يَعْصِيَهُ فَلاَ يَعْصِهِ“(5)
جس نے اللہ کی معصیت اور نافرمانی کے لئے نذر مانی وہ اسے پورا نہ کرے۔
اب اگر کوئی شخص شاہ عبد القادر جیلانی رحمہ اللہ کے لئے نذرو نیاز مانتا ہے تو اس کی یہ نذر معصیت اور نافرمانی کی نذر ہوگی، جس سے اسلام نے نہایت سختی سے روکا ہے، اس لئے ایسی نذر مندرجہ بالا ادلہ کی روشنی میں باطل اور ممنوع ہے۔
(1) مخلوق کے لئے نذر ماننا جائز نہیں ہے، کیونکہ نذر ماننا بھی ایک عبادت ہے جو صرف اللہ کے لئے کی جاتی ہے۔
(2) مُردوں کے لئے نذر ماننا جائز نہیں ہے، کیونکہ وہ نفع ونقصان کے مالک نہیں ہوتے۔
بہت سے لوگ شیخ عبد القادر جیلانی رحمہ اللہ کو غوث پاک کہتے ہیں، جیسا کہ آپ کے سوال میں بھی ہے اور ان کا عقیدہ ہے کہ ان کے لئے پیش کی گئی نذر ونیاز سے وہ خوش ہو کر ہمارے لئے اللہ کے یہاں سفارش کرتے ہیں اور ہماری مرادیں پوری کرادیتے ہیں، حالانکہ یہ عقیدہ بالکل غلط اور بے بنیاد ہے اور اس طرح کا اعتقاد کفر ہے، یہ اہل جاہلیت کا عقیدہ ہے، وہ بھی یہی کہتے تھے کہ:
﴿مَا نَعْبُدُهُمْ اِلَّا لِيُقَرِّبُوْنَآ اِلَى اللّٰهِ زُلْفٰی﴾(6)
ہم ان کی عبادت اسی واسطے کرتے ہیں کہ وہ ہمیں اللہ سے قریب کردیں گے۔
وہ بھی اپنے معبودوں کی پرستش اور نذر ونیاز اسی عقیدے سے کرتے تھے کہ یہ اللہ کے پاس ہماری سفارش کریں گے:
﴿وَيَقُوْلُوْنَ هٰٓؤُلَاۗءِ شُفَعَاۗؤُنَا عِنْدَاللّٰهِ ﴾(7)
اور کہتے ہیں کہ یہ اللہ کے پاس ہمارے سفارشی ہیں۔
﴿وَجَعَلُوْا لِلّٰهِ مِمَّا ذَرَاَ مِنَ الْحَرْثِ وَالْاَنْعَامِ نَصِيْبًا فَقَالُوْا ھٰذَا لِلّٰهِ بِزَعْمِهِمْ وَھٰذَا لِشُرَكَاۗىِٕنَا فَمَا كَانَ لِشُرَكَاۗىِٕهِمْ فَلَا يَصِلُ اِلَى اللّٰهِ ۚ وَمَا كَانَ لِلّٰهِ فَهُوَ يَصِلُ اِلٰي شُرَكَاۗىِٕهِمْ ۭسَاۗءَ مَا يَحْكُمُوْنَ﴾(8)
اور اللہ تعالی نے جو کھیتی اور مویشی پیدا کئے ہیں ان لوگوں نے ان میں سے کچھ حصہ اللہ کا مقرر کیا اور خود کہتے ہیں کہ یہ تو اللہ کا ہے اور یہ ہمارے معبودوں کا ہے، پھر جو چیز ان کے معبودوں کی ہوتی ہے وہ تو اللہ کی طرف نہیں پہنچتی، اور جو چیز اللہ کی ہوتی ہے وہ ان کے معبودوں کی طرف پہنچ جاتی ہے، کیا ہی برا فیصلہ وہ کرتے ہیں۔
خلاصہ یہ کہ شیخ عبد القادر جیلانی رحمہ اللہ کی نیاز جائز نہیں، اور اس کا کھانا بھی مباح نہیں ہے، کیونکہ جو بھی کھانا غیر اللہ کے لئے ہو وہ﴿ وَمَآ اُهِلَّ لِغَيْرِ اللّٰهِ بِه﴾(9) میں داخل ہے، اور مسلمانوں کے لئے اس کا کھانا جائز نہیں ہے۔


(1) الدهر: ٧.
(2) صحيح البخاري: 11 /581، [6696] کتاب الإيمان، باب النذر في طاعة الله.
(3) سنن ابي ابوداود: 3 /593 [3289]کتاب الإيمان، باب ما جاء في النذر في المعصية.
(4) سنن الترمذي: 4 /88 [1526] کتاب النذور، باب من نذر أن يطيع الله فليطعه.
(5) المصدر السابق.
(6) الزمر: 3.
(7) يونس: 18.
(8) الانعام: 136.
(9) المائدة: 3.

نعمة المنان مجموع فتاوى فضيلة الدكتور فضل الرحمن: جلد اول، صفحہ: 237- 240.

Previous articleRoze ke liye Niyat
Next articleGyarhvi Kerne Ka Hukm
RELATED ARTICLES

Shaitan ka pehla mission kya hai

حوا کی بیٹی تیرے سر کا آنچل کس نے سرکا دیا؟شیطان کا اول مشن ہی یہی ہے

Zindagi ka tajurba kaise karen

ایک 50 سالہ شریف آدمی ڈپریشن کا شکار تھا اور اس کی بیوی نے ایک ماہر نفسیات...

Ek gareeb ki ladki

غریب کی لڑکی ایک دوست کہنے لگا کہ میرا رشتہ ہوگیا ہے مگر میں نے وہ رشتہ...

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here

Most Popular

Shaitan ka pehla mission kya hai

حوا کی بیٹی تیرے سر کا آنچل کس نے سرکا دیا؟شیطان کا اول مشن ہی یہی ہے

Zindagi ka tajurba kaise karen

ایک 50 سالہ شریف آدمی ڈپریشن کا شکار تھا اور اس کی بیوی نے ایک ماہر نفسیات...

Ek gareeb ki ladki

غریب کی لڑکی ایک دوست کہنے لگا کہ میرا رشتہ ہوگیا ہے مگر میں نے وہ رشتہ...

lailatul qadr kab aati hai

لیلۃ القدر کی اہمیت و فضیلت پہ ایک مکمل سورت نازل ہوئی ہے جس سے اس کی...

Recent Comments

Translate »