Thursday, January 20, 2022
Homeacchi batenHazrat adam ali salam kitne saal tak rote rahe

Hazrat adam ali salam kitne saal tak rote rahe

سوال: حضرت آدم عليہ السلام جنت سے نکال دیئے گئے تو کتنے سال تک روتے رہے؟

جواب: حضرت آدم عليہ السلام ایک سو اسی(180) سال تک روتے رہے۔

ستر سال تک تواکل شجرہ پر، ستر سال تک اپنی خطاؤں پر اور چالیس سال تک ہابیل کے قتل پر روتے رہے۔

کل ایک سو اسی سال ہوگئے۔( البدایہ والنہایہ 1ص 80)

سوال: حضرت آدم عليہ السلام جب زمین پر اترے تو آپ( عليہ السلام )کا قد کتنا لمبا چوڑا تھا؟

جواب: جب آدم عليہ السلام زمین پر اترے سر آسمان میں لگا ہوا تھا

اور پیر زمین پر تھے۔( الکامل 1 ص 38)

پھر اللہ تعالیٰ نے آپ(عليہ السلام )کے قد کو چھوٹا کردیا۔

یہاں تک کی ساٹھ ہاتھ کا رہ گیا۔

( البدایہ والنہایہ ج 1 ص 88)

اور حضرت آدم عليہ السلام کی چوڑائی سات ہاتھ تھی۔

( البدایہ والنہایہ ص 88)

سوال: حضرت آدم عليہ السلام جنت سے جو حجراسود لےکر آئے تھے

وہ کس قسم کے پتھر کا ٹکڑا تھا؟

جواب: وہ یاقوت کے قسم کا تھا ‌۔

( الکامل فی التاریخ ج1 ص 39)

سوال: جس وقت قابیل نے اپنے بھائی کوقتل کیا اس وقت ان دونوں کی عمر کیا تھی؟

جواب: اس وقت قابیل کی عمر پچیس سال اور ہابیل کی عمر شریف بیس سال تھی۔

سوال: جس وقت حضرت شیث عليہ السلام کی پیدائش ہوئی

حضرت آدم عليہ السلام کی عمر شریف کتنی تھی اور قتل ہابیل کے کتنے سال بعد پیدا ہوئے؟

جواب: حضرت شیث عليہ السلام کی پیدائش کے وقت حضرت آدم عليہ السلام کی عمر ایک سو بیس سال تھی

اور وفات ہابیل کے پانچ سال گزر چکے تھے۔( حوالہ بالا )

سوال: حضرت آدم عليہ السلام کی اولاد میں کون سے لڑکے تنہا پیدا ہوئے؟

جواب: جب قابیل نے ہابیل کو قتل کردیا

تو اس کے عوض میں اللہ نے حضرت شیث عليہ السلام کو پیدا کیا

اور ان کے ساتھ لڑکی پیدا نہيں ہوئی

بلکہ وہ تنہا پیدا ہوئے مگر دوسرا قول حضرت ابن عباس(رضی اللہ عنہ ) کا ہے

کہ حضرت شیث عليہ السلام تو آم( جوڑو۱ں) پیدا ہوئے ‌۔

( الکامل فی التاریخ 1 ص 47)

سوال: حضرت آدم عليہ السلام کے بیٹوں میں سب سے پہلے آگ کی پوجا کس نے کی؟

جواب: جب قابیل اپنے بھائی ہابیل کو قتل کرکے

حضرت آدم عليہ السلام سے ڈر کر یمن کی طرف بھاگ گیا۔

شیطان قابیل کے پاس آیا اور کہا ہابیل کی قربانی کی قبولیت کی وجہ یہ ہے

کہ وہ آگ کی پرستش کرتاتھا تو بھی ایسا ہی کر تیرے لیے بھی ایسا ہی ہوجائے گا۔

چنانچہ قابیل نے اسی کام کےلیے ایک گھر بنایا اور آگ کی پوجا شروع کردی

تو قابیل سب سے اول وہ شخص ہے جس نے آگ کی پوجا کی۔

( الکامل فی التاریخ لابن الاثیر 1 ص 56)

https://www.al-islam.org/uprising-ashura-and-responses-doubts-ali-asghar-ridwani/historical-view-crying-sufferings-allahs

script async src="https://pagead2.googlesyndication.com/pagead/js/adsbygoogle.js">
RELATED ARTICLES
- Advertisment -

Most Popular

Recent Comments

Translate »